حق

ویکی لغت سے
Jump to navigation Jump to search

حَق {حَق} (عربی)

ح ق ق، حَق

عربی زبان میں ثلاثی مجرد کے باب سے مشتق اسم ہے اور گا ہے بطور صفت بھی مستعمل ہے اردو میں عربی سے ماخوذ ہے اور بطور اسم اور صفت استعمال کیا جاتا ہے 1795ء کو قائم کے

"دیوان" میں مستعمل ملتا ہے۔

اسم نکرہ

جمع: حُقُوق {حُقُوق}

معانی[ترمیم]

1. سچائی، صداقت (باطل کی ضد)۔

؎ اگر ہو خرمنِ باطل تو شعلہ سوزاں

اگر ہو گلشن حق تو طراوت شبنم، [1]

2. ثابت، برحق، حقیقت پر مبنی۔

"خدا حق ہے اور حق سب ٹھار ہے آدمی کے جنس کوں حق پر آتے کیا بار ہے"۔، [2]

3. صحیح، ٹھیک، درست، بجا۔

"حق یہ ہے کہ جسے لغت دیکھنی ہو تو مولانا حالی کی لغت دیکھے"۔ [3]

سچ، سچی بات وغیرہ۔

؎ واقعہ منصور کاسن کر کھلا ہم کو یہ راز

حق کہے سے آدمی ہوتا ہے قابل دار کے [4]

4. اللہ، خدا۔

؎ عطائے حق کا جو قاسم ہے وہ ابوالقاسم

ملیک و مقسط و معطی و مقتدر کی قسم، [5]

5. حصہ۔

"ڈیڑھ سیر کی ران ہے تو آدھ سیر حق نلی اور ہڈی کا نکل گیا"۔، [6]

6. فرض، ذمہ داری (زیادہ تر کسی کے احسانات کی وجہ سے اس کی نسبت)۔

تمہارے اوپر دنیا میں دوقسم کے حق ہیں ایک خدا کا اور دوسرا بندوں کا"۔، [7]

7. صِلہ، بدلہ، عوض۔

؎ ہے فرض شوہروں پہ بیویوں کی اس وفا کا حق

نہ جانے جو وفا کا حق نہ مانے وہ خدا کا حق، [8]

8. محنتانۂ اجرت، مزدوری، اجورہ۔

"اس موقع پر دائی پیٹ پر تیل لگاتی ہے اور تیل ملوائی کا حق اس کو سب عورتیں مل کر دیتی ہیں"، [9]

9. انعام، ینگ جیسے بہن کا حق جو شادی میں دیا جائے۔

؎ جو سلامی میں ہمیں شاہِ اُمم بخشیں گے

حق تمہیں مہندی لگانے کا وہ ہم بخشیں گے، [10]

10. کسی کام کو جیسا چاہیے ویسا کرنے کا عمل۔

؎ حق ڈھونڈھنے کا آپ کو آتا نہیں ورنہ

عالم ہے سبھی یار کہاں یار نہ پایا، [11]

11. { تصوف }وجود محض (جس کی وحدت حقیقی ہو)۔ (مصباح التعرف)۔

انگریزی ترجمہ[ترمیم]

justness, propriety, rightness, truth; reality, fact; justice; right, title, claim, due, lot; duty, obligation; behalf, benefit; the truth, the true God

صفت ذاتی [12]

جمع: حُقُوق {حُقُوق}

معانی[ترمیم]

1. نسبت، بابت، لینے، واسطے (میں کے ساتھ)۔

"اس کے جملہ حقوق اشاعت واخذ و ترجمہ شکیب کی بیوہ .... کے حق میں محفوظ ہیں"۔، [13]

2. مستحق ہونے کا وصف، استحاق، اختیار۔

؎ حاصل ہے شاہباز کو حق درندگی

کنجشک کو نہیں ہے مگر اذن احتجاج، [14]

انگریزی ترجمہ[ترمیم]

just, proper, right, correct, true; suitable to reality or fact

مترادفات[ترمیم]

سَچّائی، صِدْق، صَداقَت، اِسْتِحْقاق، اِنْصاف، فَرِیضَہ،

مرکبات[ترمیم]

حَقِّ اِشاعَت، حَقُّ الْاَمْر، حَقُّ الْتَحْصِیل، حَقُّ الْخِدْمَت، حَقُّ السَّعْی، حَقُّ الْعِباد، حَقُّ الْقَدَم، حَقُّ اللہ، حَقُّ النَّاس، حَقُّ النّاظِرِین، حَقُّ النَّظَر، حَقُّ النَّفْس، حَقُّ الْواقِعَہ، حَقُّ الْیَقِین، حَقِ اِمْتِناع، حَقِ اِنْسانی، حَقِ آسائِش، حَق آشْنا، حَق آشَنائی، حَق بات، حَق بَجانِب، حَق بھِینْٹ، حَق بِینی، حَق پَٹْواری، حَق پَذِیر، حَق پَرَسْت، حَق پَرَسْتی، حَق پِژوہ، حَق پِژوہی، حَق پَسَنْد، حَق پوشی، حَقِّ تالِیف، حَقِّ تَحْرِیر، حَقِّ تَحْصِیل، حَق تَعالٰی، حَق تَلَفی، حَقِّ تَوَقُّع، حَق جُو، حَقِّ جَواز، حَق جوئی، حَق حُقُوق، حَق حَلال کا، حَقِّ خِدْمَت، حَقِّ خِزانَہ، حَق داد، حَق داری، حَق دُباؤُ، حَقِّ دَسْتُوری، حَقِّ رائے دِہی، حَق رَس، حَق رَسی، حَق رَسِیدَہ، حَقِّ رَعایا، حَقِّ زَمِینْداری، حَقِ زَوجِیَّت، حَقِّ سَرْبَراہ، حَقِّ سَرْکار، حَق سِیَر، حَقِّ شُفْع، حَق شَناس، حَق شَناسی، حَقِ شَوہَری، حَقِ طَبْع، حَق طَراز، حَق طَلَبی، حَق غَصْبی، حَق فَراموش، حَق فَراموشی، حَق فِروش، حَق فَروشی، حَقِّ قائِم مُقامی، حَقِ قَدامَت، حَقِ کوش، حَق گُزار، حَق گُزاری، حَق گو، حَق گوئی، حَقِ مال، حَقِّ مال، حَقِّ مالِ ضامِن، حَقِّ مالِکانَہ، حَقِّ مُرَجَّع، حَقِّ مَرْعی، حَقِّ مُرَوَّجَہ، حَقِّ مُرُور، حَقِّ مِلْکِیَّت، حَقِّ مَہْر، حَق میں، حَق ناشِناس، حَق ناشِناسی، حَقِّ ناظِری، حَقِّ نَظَر، حَق نِگَر، حَق نُما، حَق نُمائی، حَقِّ نَمَک، حَق نَواز، حَق نِیوش، حَقِّ وِراثَت، حَق یافْتَہ، حَقِّ خُود اِخْتِیاری، حَقِّ خُود اِرادِیَّت، حَق دار، حُقُوقُ الْعِباد، حُقُوقُ اللہ

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ( 1966ء، منحمنا، 50 )
  2. ( 1635ء، سب رس، 11 )
  3. ( 1935ء، چند ہم عصر، 4 )
  4. ( 1846ء، آتش، کلیات، 204 )
  5. ( 1966ء، منحمنا، 29 )
  6. ( 1929ء، اودھ پنچ، لکھنو، 14، 4:8 )
  7. ( 1908ء، صبح زندگی، 88 )
  8. ( 1925ء، شوق قدوائی، عالم خیال، 25 )
  9. ( 1905ء، رسوم دہلی، سیداحمد، 7 )
  10. ( 1875ء، دبیر، دفتر ماتم، 52:4 )
  11. ( 1810ء، میر، کلیات، 127 )
  12. ( مذکر - واحد )
  13. ( 1972ء، روشنی اے روشنی (عرض ناشر) )
  14. ( 1942ء، سنگ و خشت، 74 )

مزید دیکھیں[ترمیم]